کیا پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں مزید بڑھے گی؟جانیے 654

کیا پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں مزید بڑھے گی؟جانیے

کیا پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں مزید بڑھے گی؟جانیے اس رپورٹ میں

وفاقی وزیر فواد چوہدری نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں مزید بڑھنے کا عندیہ دے دیا۔تفصیلات کے مطابق

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مزید اضافے کا عندیہ دیتے ہوئے کہا کہ اس معاملے کا تعلق گورننس سے نہیں پہے۔فواد چوہدری کی جانب سے جاری بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ

گذشتہ دنوں قومی اسمبلی میں پیش آنے والا واقعہ افسوسناک ہے،ہمیں قوانین میں ترمیم کی ضرورت ہے۔

فواد چوہدری نے اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی تقریر پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ لگتا ہے انہوں نے بجٹ نہیں پڑھا۔بچوں کے دودھ پر تو ٹیکس ہے ہی نہیں۔

چئیرمین پیپلز پارٹی پر بھی طنزیہ جملے کستے ہوئے انہوں نے کہا کہ بلاول زرداری نے کبھی کچھ نہیں پڑھا۔

بجٹ کیا پڑھنا ہے۔شہباز شریف نے انتخابی اصلاحات پر فوکل پرسن مقرر نہیں کیا،اپوزیشن کو کئی بار مذکرات کی پیشکش کر چکے ہیں۔

فواد چوہدری نے مزید کہا کہ پٹرول قیمتوں کا گورننس سے کوئی تعلق نہیں،پٹرول کی عالمی قیمت میں اضافے پر ہمیں بھی بڑھانی پڑے گی۔

انہوں نے اس بات کو تسلیم کیا کہ ڈیزل مہنگا ہونے سے زندگی کے معمولات پر اثر پڑا ہے۔

خیال رہے کہ دو روز قبل وفاقی حکومت کی جانب سے نئے مالی سال کا بجٹ پیش کرنے کے بعد پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کیا گیا تھا۔

حکومت نے پٹرول فی لیٹر 2 روپے 13 پیسے، لائٹ اسپیڈ ڈیزل 2 روپے 3 پیسے جبکہ مٹی کا تیل 1 روپیہ 89 پیسے اور ہائی اسپیڈ ڈیزل 1 روپے 79 پیسے مہنگا کر دیا۔

اضافے کے بعد پٹرول کی نئی قیمت 110 روپے 69 پیسے، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی نئی قیمت 112 روپے 55 پیسے، لائٹ اسپیڈ ڈیزل کی نئی قیمے 79 روپے 68 پیسے، جبکہ مٹی کے تیل کی نئی قیمت 81 روپے 89 پیسے ہوگئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں